مصر کے قبطیوں کے مذہبی پیشوا کے نام آیت اللہ اراکی کا خط
عالمی ادارہ تقریب مذاہب اسلامی اس افسوسناک واقعے پر آپ کی اور ان بے گناہ مصری قبطی شہیدوں کی خدمت میں تعزیت پیش کرتا ہے
داعش تکفیری گروہ کہ جو شب روز خواتین، بچوں، بوڑھوں، مردوں اور جوانوں پر ظلم و ستم روا رکھے ہوئے ہے، کے ہاتھوں ۲۱ بے گناہ مصری قبطی بھائیوں کے سر قلم کئے جانے کی اندوہناک اور حزن و ملال سے لبریز خبر ہمیں موصول ہوئی۔ یہ دہشتگرد گروہ ہر گذرتے دن کے ساتھ عرب اور اسلامی ممالک میں اور اپنے مغربی آقائوں اور غاصب صیہونی حکومت اور اسکے ساتھیوں کی خدمت کی غرض سے اختلافات اور جنگ و جدل کی آگ کو بھڑکا رہا ہے۔
تاریخ شائع کریں : جمعه ۱ اسفند ۱۳۹۳ گھنٹہ ۲۱:۴۷
موضوع نمبر: 183199
 
تنا نیوز کے مطابق داعش تکفیری اور دہشتگرد گروہ کی جانب سے ۲۱ مصری قبطیوں کے سر قلم کئے جانے پر شدید رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے عالمی ادارہ تقریب مذاہب اسلامی کے سربراہ آیت اللہ محسن اراکی نے مصر کے اورتھوڈوکس قبطیوں کے پیشوا تواضروس دوم کے نام ایک تعزیتی پیغام ارسال کیا ہے، جس کا متن مندرجہ ذیل ہے۔


بسم اللہ الرحمن الرحیم

جناب پاپ تواضروس دوم
مصر کے اورتھوڈوکس قبطیوں کے مذہبی پیشوا
سلام اور نہایت احترام

داعش تکفیری گروہ کہ جو شب روز خواتین، بچوں، بوڑھوں، مردوں اور جوانوں پر ظلم و ستم روا رکھے ہوئے ہے، کے ہاتھوں ۲۱ بے گناہ مصری قبطی بھائیوں کے سر قلم کئے جانے کی اندوہناک اور حزن و ملال سے لبریز خبر ہمیں موصول ہوئی۔
یہ دہشتگرد گروہ ہر گذرتے دن کے ساتھ عرب اور اسلامی ممالک میں اور اپنے مغربی آقائوں اور غاصب صیہونی حکومت اور اسکے ساتھیوں کی خدمت کی غرض سے اختلافات اور جنگ و جدل کی آگ کو بھڑکا رہا ہے۔
عالمی ادارہ تقریب مذاہب اسلامی اس غیر انسانی فعل کی شدید مذمت کرتا ہے اور اس افسوسناک واقعے پر آپ کی اور ان بے گناہ مصری قبطی شہیدوں کی خدمت میں تعزیت پیش کرتا ہے اور اس تکفیری دہشتگرد گروہ کے مقابلے میں مصر کے عوام کی بھرپور حمایت کا اعلان کرتا ہے۔
عالمی ادارہ تقریب بین مذاہب دنیا بھر کے انسانوں، تمام حریت پسندوں اور مصر کے تمام رہبروں اور ان تمام افراد سے جن کے لئے اس ملک کا مستقبل بہت اہمیت کا حامل ہے، تقاضہ کرتا ہے کہ اس بے رحم، دہشتگرد گروہ کے مقابلے اور اسے نابود کرنے کے لئے آپس میں اتحاد و اتفاق قائم کریں۔

محسن اراکی،
سیکرٹری جنرل، مجمع جہانی مذاہب اسلامی
اسلامی جمہوریہ ایران ، تہران
Share/Save/Bookmark